قادری اور عمرانی انقلاب کی اصل کہانی

ارشد سلہری
اس امپورٹڈ انقلاب کی بنیاد اسی دن پڑ گئی تھی جب سابق صدر آصف زردری نے امریکہ کی بجائے چین کے کئی دورے کیے اور نئے تعلقات ستوار کیے ، چین اور روس سمیت امریکہ مخالف ممالک سے مل کر اکنامک زون کی بات کی تھی ۔ آصف زرداری کے خلاف جو کچھ ہوا قارئین واقف ہیں۔ آصف زدرداری کا کمال یہ ہے کہ انہوں نواز حکومت میں بھی پالیسی جاری رکھی اور نواز شریف کو بھی امریکہ مخالف راہ پر لے آیا گیا ۔ ایران سے گیس پائپ لائن منصوبہ ، گوادر بندر گاہ کی چین کو حوالگی ، پرویز مشرف کی گرفتاری اور مقدمہ سمیت شمالی وزیرستان میں آپریشن سے لعیت و لعل نواز شریف کے بڑے جرم ہیں۔ عوام کو ڈلیور نہ کرنا اور مسائل کے حل جیسے معاملات امریکہ کے لئے دلچسپی کے حامل نہیں ہیں ہو بھی کیسے سکتے ہیں ملکوں کے اپنے مفادات ہوتے ہیں جس کا وہ تحفظ کرتے ہیں ۔پاکستان میں نظریاتی سیاست نہیں ہے ۔ امریکہ سمیت سرمایہ دار بلاک کے ممالک نے پاکستان کو کھلی منڈی بنایا ہوا ہے ۔ اپنے مقاصد اور مفادات کے لئے پاکستان میں کھیل کھل کر کھیلتے ہیں ۔ گراونڈ پاکستان آرمی کے جرنیل فراہم کرتے ہیں ۔ یہ تاریخ کا حصہ ہے ایوب ، ضیا ء اور پرویز مشرف تک امریکی کھیل ہیں۔ پرویز مشرف کا امریکہ سے کیا رشتہ ہے اور کیوں اتنے اہمیت کے حامل ہیں ۔ یہ سچ ہے کہ پرویز مشرف کی ذات کا مسلہ نہیں ہے ، وہ سابق فوجی جرنیل ہیں، انہیں گرفتار کیا گیا ہے ، عدالتوں میں گھسیٹا جا رہا ہے ، اگر انہیں سزا ہوتی ہے تو آپ تصور کر سکتے ہیں کہ آئندہ کوئی جرنیل حکومت پر قبضہ کرے گا ؟ یہی مسلہ ہے، امریکہ کا تمام تر دارومدار فوجی جنتا پر ہے اور اگر یہ دروازہ بند ہوگیا تو امریکہ پاکستان میں کھیل نہیں سکے گا بلکہ پاکستان امریکی ہاتھ سے نکل جائے گا ۔ امریکہ نہیں چاہتا کہ پاکستان میں جمہوریت مضبوط ہو ، سیاسی قوتیں پاور حاصل کریں اور سیاسی پارٹیاں امریکہ کی جانب دیکھنا چھوڑ دیں ۔ قیام پاکستان سے لیکر آج تک امریکہ اور اتحادیوں نے پاکستان میں اپنے مقاصد کے حصول کے لئے ہمیشہ پاکستان آرمی کو استعمال کیا ہے اور امریکہ نے ہمیشہ پاکستان آرمی سے تعلقات رکھے ہیں اور مالی امداد بھی دی ہے ۔افواج پاکستان میں امریکہ کی مرضی کے بغیر جنرل نہیں بنایا جا سکتا ہے اور نہ آرمی چیف کا تقرر ہوتا ہے ۔پاکستان میں امریکی اثر و رسوخ کی یہ ایک معمولی جھلک ہے ۔ امریکہ پاکستان کی سرحد افعانستان میں خوف کے سائے میں بیٹھا ہے ۔ پاکستان میں امریکہ کو پرو آرمی اور امریکی مفادات کی محافظ حکومت کی ضرورت ہے ۔قادری عمرانی انقلاب کا کھیل اسی سلسلے کی ایک کڑی ہے ۔ اس کے بین ثبوت امریکی اہلکاروں کی خاموش ملاقاتیں ، آئی ایس آئی کے سابق چیف شجاع پاشا کا متحرک ہونا اور ڈاکٹر قادری اور عمران خان کا حکومت کے جانے کا مکمل یقین اس امر کی چغلی کھاتا ہے کہ دال میں کالا نہیں پوری دال ہی کالی ہے۔ دونوں ’’ انقلابیوں ’’ کو یقین دہانی کرائی گئی ہے کہ قدم بڑھا ؤ فوج تمہارے پچھے ہے۔ لازمی بات ہے فوج کے پچھے امریکہ ہے ۔ (جاری ہے)

About aapakistan

We are not saying that every single politician is corrupt and greedy. There are many good intentioned people in politics today who want to work honestly for the people of Pakistan. But the current system of polity does not allow honest politicians to function. We are also not claiming that every single person who joins our party will be hundred percent honest. We are saying that it is the system that has become very corrupt and needs to be changed immediately. Our aim in entering politics is not to come to power; we have entered politics to change the current corrupt and self-serving system of politics forever. So that no matter who comes to power in the future, the system is strong enough to withstand corruption at any level of governance.
This entry was posted in Uncategorized. Bookmark the permalink.

Leave a Reply

Please log in using one of these methods to post your comment:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s