عا م آ د می

ا ر شد سلہر ی
پا کستا ن کی تا ر یخ کا پہلا مو قع ہے کہ عا م آ د می ، کسا ن ، ہا ر ی ، ٹیکسی ڈ ر ا ئیو ر ، محنت کشو ں ، ر یڑ ھی با نو ں کی سیا سی جما عت کا قیا م عمل میں لا یا گیا ہے ۔ ا س سے قبل عا م آ د می کو محض سیا سی پا ر ٹیو ں میں ا یند ھن کے طو ر ہی ا ستعما ل کیا گیا ہے ۔ کسی سیا سی پا ر ٹی کے مر کز ی عہد ید ا ر و ں ، سینٹر ل کمیٹی یا فیصلہ سا ز ا د ا ر و ں کا ممبر نہیں بنا یا گیا ۔ عا م آ د می پا ر ٹی پا کستا ن بلا شک و شبہ صر ف ا و ر صر ف عا م آ د می لو گو ں کی پا ر ٹی ہے، جس کے مر کز ی ا د ا ر و ں میں صر ف عا م آ د می ہی جا سکتا ہے ۔ عا م آ د می پا ر ٹی پا کستا ن کی سینٹر ل و ر کنگ کمیٹی میں سو فیصد عا م لو گ ہیں ۔ مز ید لو گو ں کو بھی شا مل کیا جا ر ہا ہے ۔ ا س طر ح عا م آ د می پا ر ٹی پا کستا ن کے د یگر ا د ا ر و ں ۔ ر ا بطہ کو نسل ، ا یگز یکٹو کمیٹی ، و ر کنگ کمیٹی ، تھنک ٹینک میں عا م آ د می ہی شا مل ہو گا ۔ عا م آ د می پا ر ٹی پا کستا ن میں  پسند نا پسند یا د یگرذ ر ا ئع سے پا ر ٹی عہد و ں یا پا ر ٹی کی مر کز ی قیا د ت میں شا مل ہو نے کے لئے ا ستعما ل نہیں ہو ں گے بلکہ عا م آ د می پا ر ٹی کا ہر ممبر بلا ر و ک ٹو ک کسی بھی ا د ا ر ے میں جا سکتا ہے ۔ مر کز ی عہد و ں پر جا نے کیلئے کو ئی ر کا و ٹ نہیں ہے ۔ عا م آ د می پا ر ٹی پا کستا ن ملک کی و ا حد سیا سی پا ر ٹی ہے جس میں میر ٹ کو بنیا دبنا یا گیا ہے ا و ر ہر ممبر ا پنی پر فا ر منس ا و ر میر ٹ کی بنیا د پر کسی بھی پا ر ٹی عہد ے پر جا سکتا ہے ۔ د و سر ی جا نب پا ر ٹی فیصلو ں میں پا ر ٹی کا ہر ممبر شر یک ہو تا ہے ۔  
عا م آ د می پا ر ٹی پا کستا ن کسی سیا سی جما عت یا طبقہ کے خلا ف نہیں ہے بلکہ عا م آ د می پا ر ٹی پا کستا ن میں  سیا سی صلح جو ئی ا و ر نظر یا تی سیا ست کی بنیا د ہے ۔ عا م آ د می پا ر ٹی کا ا وّ لین مقصد عا م لو گو ں  کو  سیا ست میں د ا خل کر نا ہے جس طرح ہمارا نعرہ ہے ۔ سیا ست ہر آ د می کا حق ہے ۔ عا م آ د می پا ر ٹی پا کستا ن ا سی حق کو حا صل کر نے کے لئے مید ا نعمل میں نکلی ہے کہ ہر عا م آ د می یہ حق ر کھتا ہے کہ و ہ ا پنی تقد یر کا خو د فیصلہ کر ے ۔ ا یو ا ن میں بیٹھے ا و ر ا پنے مسا ئل کا خو د حل نکا لے کیو نکہ عا م آ د می کے مسا ئل کو عا م آ د می ہی سمجھ سکتا ہے ا و ر حل کر سکتا ہے ۔ ا یو ا نو ں میں بیٹھے سر ما یہ د ا ر ، صنعت کا ر ، جا گیر د ا ر ا و ر ا جا ر ہ د ا ر ا پنے سر ما ئے کو بڑ ھا تے ہیں ۔ ا نہیں عا م آ د می کے مسا ئل سے کو ئی سر و کا ر نہیں ہے ا ور ہو بھی نہیں سکتا ہے جب عا م آ د می پا ر ٹی کی نما ئند گی ہی نہیں ہے ۔ عا م آ د می کے نما ئندہ  عا م آ د می نہیں ہیں تو کیسے مسائل  کو سمجھ پا ئے گا ۔ جو مسا ئل عا م آ د می کے ہیں ۔ ا یو ا نو ں میں مو جو د لو گو ں کا ا ن سے د و ر کا بھی و ا سطہ نہیں ہے ، عا م آ د می کے ر ہنے کے علا قے ا لگ ہیں ۔ د و کا نیں ا لگ ہیں سکو ل ہسپتا ل ا لگ ہیں تو بھر عا م آ د می کی سیا سی پا ر ٹی ا لگ کیو ں نہیں ۔ جب عا م آ د می  ا میر و ں کے علا قے میں ر ہ نہیں سکتا ہے ا ن کے علا قے میں خر ید ا ر ی نہیں کر سکتا ہے ۔ سکو ل میں ا پنے بچے نہیں پڑ ھا سکتا ہے ۔ ہسپتا لو ں میں ا پنا علا ج نہیں کر و ا سکتا ہے تو ا ن کے سا تھ سیا ست کیو ں ، محض نعر ے ما ر نے ، قر با نیا ں د ینے ، جھنڈ ے لہر ا نے ا و ر ا ن کیلئے و و ٹ ما نگنے ا و ر ا ن کی غلا می کر نے کیلئے ہیں ۔ نہیں ا ب نہیں بہت ہو چکا ہے ۔ ا ب عا م آ د می کسی گیلا نی ، کسی بھٹو ، کسی شر یف کی چا کر ی نہیں کر ے گا ۔ و ہ و قت آ گیا ہے کہ عا م آ د می ا پنی تقد یر  کا خو د فیصلہ کر ے ۔ ا ب عا م آ د می ا میر و ں کے ر حم و کر م پر نہیں ر ہے گا ۔ ا میر و ں کے د ر و ا ز و ں پر ملا ز مت ا و ر ا پنے بچو ں کے مستقبل کیلئے د ھکے نہیں کھا ئے گا ۔ عا م آ د می جا گ اُ ٹھا ہے ا و ر کو ئی طا قت عا م  آ د می کو سیا سی ، سما جی ا و ر معا شی آ ز ا د ی سے محر و م نہیں کر سکے گی۔ عا م آ د می ا ٹھے گا تو پا کستا ن چلے گا ۔ یہی نجا ت کا ر ا ستہ ہے ا و ر یہی منز ل ہے۔

About aapakistan

We are not saying that every single politician is corrupt and greedy. There are many good intentioned people in politics today who want to work honestly for the people of Pakistan. But the current system of polity does not allow honest politicians to function. We are also not claiming that every single person who joins our party will be hundred percent honest. We are saying that it is the system that has become very corrupt and needs to be changed immediately. Our aim in entering politics is not to come to power; we have entered politics to change the current corrupt and self-serving system of politics forever. So that no matter who comes to power in the future, the system is strong enough to withstand corruption at any level of governance.
This entry was posted in Uncategorized. Bookmark the permalink.

Leave a Reply

Please log in using one of these methods to post your comment:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s