عا م آ د می پا ر ٹی پا کستا ن

ا رشد سلہر ی
پا کستان کی تا ر یخ میں پیپلز پا ر ٹی نے غر یب عو ا م ا و ر عا م لو گو ں کی با ت ا و ر ا نہیں حقو ق د ینے کیلئے جد و جہد کا آ غا ز کیا ،نظر یا تی سیا ست کی بنیا د ر کھی۔ محنت کشو ں ، ہا ر یو ں، کسا نو ں ا و ر عا م لو گو ں نے پیپلز پا ر ٹی کے سا تھ جذ با تی و ا بستگی پید ا کر لی جو کسی نہ کسی شکل میں آ ج بھی نظر آ تی ہے ۔ ضیا ئی آ مر یت ا و ر قا ئد عو ا م ذ و ا لفقا ر علی بھٹو کی شہا د ت کے بعد پیپلز پا ر ٹی ر ا ستہ تبد یل کر تی گئی ا و رآ ج پیپلز پا ر ٹی نظر یا تی سیا ست کی ا مین ر ہی ہیا و ر نہ ہی محنت کشو ں ، ہا ر یو ں ، کسا نو ں ا و ر غر یب عو ا م کی نظر یا تی جما عت ہے ۔ آ ج کی پیپلز پا ر ٹی محض ا قتد ا ر کے ا یو ا نو ں تک جا نیو ا لے ر ا ستو ں کی مسا فر ہے ۔ پیپلز پا ر ٹی کی قیا د ت مکمل طو ر پر ا قتد ا ر و مفا د ا ت کی پجا ر ی سر ما یہ د ا ر و ں ا و ر ا شر ا فیہ پر مبنی ہے ۔ پیپلز پا ر ٹی کی ذ یلی تنظیمو ں پی ا یس ا یف ، پی و ا ئی او، لیبر و نگ یا د یگر تما م تر مفا د ا تی گر و ہ بن کر ر ہ گئے ہیں ۔ پیپلز پا ر ٹی بلا شبہ پا کستا ن کے عا م لو گو ں کی ر و ا یت ہے لیکن یہر و ا یت د م تو ڑ ر ہی ہے ۔ جس کا مظا ہر ہ پچھلے د و تین سا لو ں سے د یکھا جا سکتا ہے کہ پیپلز پا ر ٹی کے خلا ف نو جو ا نو ں ا و ر عا م لو گو ں نے پا کستا ن تحر یکِ ا نصا ف کی جا نب ر جو ع کیا ۔ تحر یکِ ا نصا ف کی جا نب عو ا می تو جہ سے لگتا تھا کہ مستقبل کی پیپلز پا ر ٹی ا ب تحر یکِ ا نصا ف ہی ہو گی لیکن عمر ا ن خا ن کو ا قتد ا ر کی جلد ی تھی کہ تحر یکِ ا نصا ف نے نو جو ا نو ں ا و ر عا م عو ا م کو نظر ا ند ا ز کر کے سر ما یہ د ا ر ، صنعت کا ر ا و ر جگا د ر ی سیا ستد ا نو ں کے سا تھ بیٹھنا منا سب سمجھا ا و ر تحر یکِ ا نصا ف کو خا لصتاً ا شر ا فیہ کی پا ر ٹی بنا د یا ۔ عمر ا ن خا ن کے ا س عمل سے نو جو ا نو ں کو با لخصو ص ا و ر عا م لو گو ں کو با لعمو م ما یو سی کا سا منا کر نا پڑ ا ۔ جس سے تحر یکِ ا نصا ف گلی محلو ں ا و ر د یہا تو ں میں پہنچنے سے پہلے ہی و ا پس ہو گئی ا و ر شہر و ں میں بھی عا م لو گو ں نے تحر یکِ ا نصا ف سے قد م پیچھے ہٹا لئے۔ آ ج صو ر تحا ل یہ ہے کہ تحر یکِ ا نصا ف ا یک خا ص طبقہ کی جماعت بن گئی ہے ۔ عمو می و ا بستگی کے علا و ہ تحر یکِ ا نصا ف کا کو ئی و ر کر یا مقا می سطح پر فعا ل کا ر کن نہیں ہے ۔ تحر یکِ ا نصا ف کا جو بلبلہ بنا یا گیا تھا ا س پر عو ا م نے ا پنے ا علیٰ شعو ر کا اظہارکیاہے ۔عمر ا ن خا ن کے با ر ے میں آ ج عو ا می خیالات بہت مختلف ہیں ا و ر عو ا م کا عمو می ر دِ عمل بہت سخت ہے ۔ یہ ر دِ عمل ز یا د ہ ا س و قت سا منے آ یا جب پڑ و سی ملک بھا ر ت میں عا م آ د می پا ر ٹی کو مقبو لیت حا صل ہو ئی ا و ر عا م آ د می پا ر ٹی نے بر سرِ ا قتد ا ر آ تے ہی عو ا می مطا لبا ت کو ا پنی تر جیح بنا یا ۔ عا م آ د می پا ر ٹی کی قیا د ت کو عو ا می پذ یر ا ئی کے ا ثر ا ت پا کستا ن میں تیز ی سے ا بھر ے ۔ میڈ یا ، کا لم نگا ر ا و ر پا کستا ن کے عو ا می حلقے ا س ضر و ر ت کو محسو س کر نے لگے کہ عا م آ د می پا ر ٹی کا و جو د پا کستا ن میں بھی ہو نا چا ہیے ۔ ا س حو ا لے سے بے شما ر مضا مین شا ئع ہو ئے ا و ر عو ا می آ و ا ز بھی ا بھر ی جس پر ا نسا نی حقو ق کے کا ر کن ا و ر صحا فی ا ر شد سلہر ی نے سو شل میڈ یا کے ذر یعے عام لو گو ں اور قر یبی د و ستو ں سے مشا و ر ت کا آ غا ز کیا ۔ 10 جنو ر ی2014 ء کو فیس بک ا و ر ٹو یٹر پر عا م آ د می پا رٹی لا نچ کر دی ۔ بعد ا ز ا ں ا یک بلا گ بھی بنا د یا گیا ۔ 14 جنو ر ی کو بھا ر ت کے بڑ ے ا خبا ر ٹا ئمز آ ف ا نڈ یا کی ر پو ر ٹر کم ا ر ڑ ہ نے ا ر شد سلہر ی کا ا نٹر و یو شا ئع کیا ۔ جس کو بھا ر ت کے ہر ا خبا ر نے ا پنی ا شا عت میں شا مل کیا ۔ پا کستا نی میڈ یانے گر یز کی پا لیسی ر کھی ہے ۔ تا ہم عا م آ د می پا ر ٹی کی ممبر سا ز ی مہم شر و ع کر د ی گئی جس پر د نیا بھر کے پا کستا نیو ں نے حیر ا ن کن ر دعمل ظا ہر کیاا و ر آ ن لا ئن ممبر شپ فا ر م بھیجنے شر و ع کر د ئیے ہیں ۔ 22 جنو ر ی کو عا م آ د می پا ر ٹی ر ا و لپنڈ ی یو نٹ کا پہلا مشا و ر تی ا جلا س ہو ا جس میں ر ا جہ سا جدمحمد بشیر ر ا جہ ۔ عبا س ملک ، خو ر شید خا ن ، ا ر شد سلہر ی شر یک ہو ئے ا و ر ممبر سا ز ی کے حو ا لے سے لا ئحہ عمل مر تب کیا ۔ ا س طر ح لا ہو ر میں نبیل سلہر ی ، گو جر ا نو ا لہ میں ڈ ا کٹر ا رسلا ن ۔ نا ر و و ا ل میں ر ا نا فیصل ، تھر پا ر کر میں جتش کما ر ، کر ا چی میں نذ ر حسین ، سعو د ی عر ب ، جنو بی ا فر یقہ متحد ہ عر ب ا ما ر ا ت ا و ر د یگر مما لک میں ر ہا ئش پذ یر محنت کشو ں نے عا م آ د می پا ر ٹی میں8 شمو لیت ا ختیا ر کر کے پا ر ٹی کی ممبر سا ز ی کا آ غا ز کر د یا ہے ۔ مقا می سطح پر عا م آ د می پا ر ٹی کے ر ا بطہ کا ر ا و ر تر جما ن مقر ر کئے گئے ہیں جو پا ر ٹی کی ممبر سا ز ی کے ا مو ر 23 ما ر چ 2014 ء کا ہد ف مقر ر کیا گیا ہے کہ عا م آ د می پا ر ٹی پہلے مر حلے میں پا کستا ن بھر میں ممبر سا ز ی کر ے گی ۔ 23 ما ر چ کو مقا می ا جتما عا ت ہو نگے ا و ر ملک گیر ا جتما ع بھی ہو گا ۔ ا جتما عا ت میں مشا و ر تی عمل بھی مکمل کیا جا ئے گا ا و ر عا م آ د می پا ر ٹی کے ا د ا ر ے بھی تشکیل د ئیے جا ئیں گے جو خا لصتاً جمہو ر ی طر یقے سے تشکیل ہو نگے ا و ر پا ر ٹی عہد ید ا ر و ں کا چنا ؤ بذ ر یعہ الیکشن جمہو ر ی طر یقے سے عمل میں لا یا جا ئے گا ۔ عا م آ د می پا ر ٹی کی ممبر شپ کیلئے میر ٹ ر کھا گیا ہے جسکی بنیا د بلا تفر یق ر نگ و نسل ا و ر مذاہب ہے ا و ر عا م آ د می کو تر جیح د ی گئی ہے ۔ عا م آ د می پا ر ٹی کی نظر یا تی ا سا س لبر ل ا ز م ما ڈ ر ن ریشلز م ا و ر عو ا می فلا ح و بہبو د ہے ۔ عمو می نعر ہ ، سیا ست ہر عا م شہر ی کا حق د یا گیا ہے تا ہم آ ئین ا و ر منشو ر سمیت سلو گن ۔ جھنڈا تما م تر معا ملا ت کو و سیع ترمشا و ر ت کے بعد فا ئنل کیا جا ئے گا ۔ عا م آ د می پا ر ٹی کی جنگ کر پشن ا و ر بد عنو ا نی کے خلا ف ہے ۔ آ ج پیشہ و ر سیا ستد ا ن پو ر ی قو م کو کر پٹ ا و ر بد عنو ا ن قر ا ر د ے ر ہے ہیں جو کہ ا صل میں و ہ ا پنی گند گی پو ر ی قو م پر ا چھا لنے کی کو شش کر ر ہے ہیں کہ صر ف سیا ستد ا ن کر پٹ یا بد عنو ا ن نہیں ہیں بلکہ پو ر ی قو م ہی کر پٹ ا و ر بد عنو ا ن ہے ۔ ا و ر د و سر ی جا نب نمک خو ا ر ملا بھی یہی کہہ ر ہا ہے کہ جیسے عو ا م و یسے حکمر ا ن ہیں ۔ عا م آ د می پا ر ٹی عو ا می نما ئند گی کر تے ہو ئے ملا ا و ر کر پٹ سیا ستد ا نو ں کے عو ا م پر ا لز ا ما ت کا د فا ع کرے گی ا و ر عا م آ د می کے خلا ف پر و پیگنڈ ے کا تو ڑ کیا جا ئے گا ۔عا م آ د می پا ر ٹی پا کستا ن کا ا ولین فر یضہ ا و ر مقصد عا م آ د می کو سیا ست میں د ا خل کر نا ا و ر عا م آ د می کے حقو ق کی جنگ کر نا ہے ۔ ا و ر عا م آ د می پا ر ٹی یقین د لا تی ہے کہ عا م آ د می کے حقو ق کیلئے ہر فو ر م پر ا و ر ہرجگہ جنگ لڑ ی جا ئے گی ا و ر عو ا می طا قت سے کر پٹ ما فیا کو نکا ل با ہر کیا جا ئے گا ۔ عا م آ د می کی جنگ عا م آ د می پا ر ٹی کے سا تھ عا م آ د می کے حقو ق کے لئے جا ر ی ر ہے گی ۔

About aapakistan

We are not saying that every single politician is corrupt and greedy. There are many good intentioned people in politics today who want to work honestly for the people of Pakistan. But the current system of polity does not allow honest politicians to function. We are also not claiming that every single person who joins our party will be hundred percent honest. We are saying that it is the system that has become very corrupt and needs to be changed immediately. Our aim in entering politics is not to come to power; we have entered politics to change the current corrupt and self-serving system of politics forever. So that no matter who comes to power in the future, the system is strong enough to withstand corruption at any level of governance.
This entry was posted in Uncategorized. Bookmark the permalink.

Leave a Reply

Please log in using one of these methods to post your comment:

WordPress.com Logo

You are commenting using your WordPress.com account. Log Out / Change )

Twitter picture

You are commenting using your Twitter account. Log Out / Change )

Facebook photo

You are commenting using your Facebook account. Log Out / Change )

Google+ photo

You are commenting using your Google+ account. Log Out / Change )

Connecting to %s